کتے کی 10 حیران کن خوبیاں کتا 20 کلومیٹر تک کسی چیز کو سونگھ سکتا ہے

Posted by

مثل مشہور ہے کہ "کُتا ایک وفادار جانور ہے” جو اپنے مالک کے ساتھ ہر حال میں گُزارا کرتا ہے اور خالق کائنات نے اپنی اس مخلوق کو بیشمار ایسی خوبیوں سے نوازا ہے جسکی وجہ سے یہ جانور دُنیا میں انسان کے انتہائی قریب ہے۔ اس آرٹیکل میں کُتے کی 10 ایسی خوبیاں شامل کی جا رہی ہیں جنہیں جانکر جہاں آپ کی معلومات میں اضافہ ہوگا وہاں آپ بھی کُتے کو پالتو جانور کے طور پر رکھنا پسند کریں گے۔

نمبر 1 کُتے کے سونگھنے کی حس

G:\Pics Sharing\pxfuel.com (8).jpg

کُتے کے سونگھنے کی حس کے متعلق تو سب ہی جانتے ہیں کیونکہ یہ انسان، منشیات اور بہت سی دُوسری چیزوں کو سونگھ کر تلاش کر لیتا ہے لیکن کیا آپ جانتے ہیں کہ کُتے کے سُونگھنے کی حس انسان سے 40 گُنا سے بھی زیادہ تیز ہے اور اگر ہوا کا رُخ ساز گار ہو تو یہ کسی بھی چیز کو 20 کلو میٹر کے اندر سونگھ کر تلاش کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔

نمبر 2 کُتے کو بیماریوں کی تشخیص کے لیے بھی استعمال کیا جاتا ہے

کُتے کی زبردست سونگھنےکی صلاحیت کی وجہ سے دُنیا کے بڑے ممالک میں اسے مختلف بیماریوں کا پتہ چلانے کے لیے استعمال کیا جا رہا ہے یہ بیماری کو سُونگھ کر اپنے مالک کو اس کے متعلق بتا سکتا ہے خاص طور پر خون میں شوگر لیول بڑھنے پر یہ سُونگھ کر مالک کو آگاہ کر دیتا ہے۔

نمبر 3 سانس لینے کے دوران بھی سونگھ سکتا ہے

کُتا اپنے سونگھنے کی حس کو بہت سے مقاصد کے لیے استعمال کرتا ہے یہ اس سے خوراک ڈھونڈ لیتا ہے، خطرے کا پتہ چلا لیتا ہے، دوست اور دُشمن کی پہچان کر لیتا ہے اور خالق کائنات نے ان کی ناک کو ایسے انداز میں تخلیق کیا ہے کہ سانس خارج کرتے وقت بھی یہ بُو کو سونگھنے کی صلاحیت رکھتا ہے کیونکہ سانس خارج کرتے وقت بھی بُو کی ہوا اس کے ناک میں موجود ہوتی ہے۔

نمبر 4 بہترین تیراک ہے

کُتے کی کُچھ نسلیں پانی میں بہترین طریقے سے تیرنے کی صلاحیت رکھتی ہیں اگرچہ تمام کُتے پانی کو پسند نہیں کرتے لیکن جو تیرنا جان جاتے ہیں اُنہیں تھوڑی سی تربیت دینے کے بعد بڑے ممالک میں سمندر اور دریا میں پانی میں ڈوبنے والوں کو بچانے والوں کی ٹیم میں شامل کر لیا جاتا ہے اور اب تک یہ کُتے کئی انسانی جانوں کو پانی میں ڈوبنے سے بچا چُکے ہیں۔

نمبر 5 کُچھ کتے چیتے سے بھی زیادہ تیز دوڑ سکتے ہیں

کُتے تیز بھاگنے کی صلاحیت رکھتے ہیں لیکن ان کی نسل گرے ہاونڈ ایک سیکنڈ سے بھی کم عرصے میں 72 کلومیٹر فی گھنٹہ کی سپیڈ اختیار کر لیتے ہیں یہاں آپ سوچیں گے کہ یہ چیتے کو کیسے ہرا سکتا ہے تو اسکا جواب یہ ہے کہ چیتا اگرچہ 130 کلومیٹر کی سپیڈ سے دوڑ سکتا ہے مگر وہ اس سپیڈ کو 30 سیکنڈ سے زیادہ عرصے برقرار نہیں رکھ پاتا لیکن گرے ہاونڈ 10 کلومیٹر تک 72 کلومیٹر فی گھنٹہ کی سپیڈ سے باآسانی دوڑ لیتا ہے۔

نمبر 6 کُتے کو انسان کی طرح پسینہ نہیں آتا

اگرچہ کُتوں کو بھی پسینہ آتا ہے لیکن یہ پسینہ انسان کے پسینے کی طرح نہیں ہوتا بلکہ آئل کی طرح کا پسینہ ہوتا ہے اور یہ اس پسینے کو بھی اپنے سونگھنے کی حس سے بہت دُور سے سونگھ لیتے ہیں صرف کُتے کے پاؤں ایسے جگہ ہیں جہاں پانی جیسا پسینہ آتا ہے اسی لیے جو لوگ اس جانور کو پالتے ہیں وہ گرمیوں میں ان کے لیے ایسی جگہ ضرور بناتے ہیں جہاں سے اپنے پاؤں ٹھنڈے کر سکے۔

نمبر 7 کُتے بھی سیدھے اور الٹے ہاتھ والے ہوتے ہیں

جس طرح انسان سیدھے یا الٹے ہاتھ سے کام کرنے کے عادی ہوتے ہیں اسی طرح کتے بھی اپنے سیدھے یا الٹے پاؤں سے کام کرنے کے عادی ہوتے ہیں اور انہیں رائٹ اور لیٖفٹ فٹر کہا جاتا ہے۔

نمبر 8 سُننے کی صلاحیت

کُتے کے سونگھنے کی صلاحیت کے ساتھ اس کے سُننے کی حس بھی بہت زیادہ تیز ہوتی ہے اور یہ بہت ہی آہستہ آوازوں کو بھی بہت دُور سے سُننے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔

نمبر 9 کُتے کے کان میں 18 مسلز ہوتے ہیں

آپ نے کُتے کے کانوں کو ادھر اُدھر حرکت کرتے ہُوئے دیکھا ہوگا کیونکہ یہ آواز کی ڈائریکشن میں حرکت کرنے کی صلاحیت رکھتے ہیں اور ایسا اس لیے ہوتا ہے کہ ان کے کانوں میں 18 ایسے مسلز ہیں جو انہیں مخلتف سمت سے آنے والی آوازوں پر کان دھرنے کی صلاحیت دیتے ہیں۔

نمبر 10 کُتا 2 سال کے بچے جتنا ذہین ہوتا ہے

ماہرین کے مطابق کُتا 100 الفاظ تک سیکھنے کی صلاحیت رکھتا ہے اسی طرح یہ کئی اشارے بھی ذہن نشین کر سکتا ہے اور اس کی یاد رکھنے کی یہ صلاحیت 2 سال کے بچے جتنی ہوتی ہے اور یہی وہ صلاحیت ہے جس کو استعمال کرتے ہُوئے کُتے کو ٹرین کرنے والے اسے مختلف کام کرنا سیکھاتے ہیں جس میں خاموش ہونا اُٹھنا اور بیٹھنا وغیرہ شامل ہے۔