ہر قسم کی جسمانی درد کے لیے 30 سے زائد کارآمد گھریلو ٹوٹکے

Posted by

درد کوئی بھی ہو ایک تو بتا کر نہیں آتا اور دُوسرا تکلیف اور بے سکونی پیدا کرتا ہے خاص طور پر رات کے وقت جب گھر میں کوئی دوا موجود نہ ہو۔ اس آرٹیکل میں جسم کی ہر قسم کی درد کے لیے طب ایوردیک اور یُونان کے صدیوں سے آزمودہ 30 سے زائد گھریلو ٹوٹکوں کو شامل کر رہے ہیں جو ان دردوں میں آپ کے بہت کام آسکتے ہیں۔

نمبر 1 سر درد

سر کا درد کئی وجوہات کی وجہ سے ہو سکتا ہے جس میں ہائی بلڈ پریشر، ڈپریشن، لو بلڈ پریشر، پریشانی، بُھوک وغیرہ شامل ہیں۔

ایک سے چار لہسن کے جوئے لیکر اسے تھوڑا سا نمک لگا کر کھا لیں یہ پیٹ سے مُنسلک سر درد کا خاتمہ کر دے گا اور اگر تیز بُخار کی وجہ سے سر درد ہو رہا ہے تو سُوکھے دہنیے کو پیس کر ہلکا سا پانی لگا کر پیسٹ بنا لیں اور ماتھے پر لگائیں اس سے درد میں آرام ملے گا۔

تُلسی کے تازہ پتے پیس کر سر پر ملنے سے بھی سردرد ختم ہو جاتی ہے اور اگر چھوٹی الائیچی کا پاوڈر ایک کپ دُودھ میں مکس کر کے پی لیا جائے تو بھی سردرد کو آرام آتا ہے، لونگ اور دارچینی کا پاوڈر بھی سر پر ملنے سے سر درد میں راحت کا باعث بنتا ہے۔

آدھے سر کی درد کے لیے زعفران کو ہلکا سا گھی میں گرم کر کے استعمال کریں اور نظام تنفس سے جُڑے سر درد کے لیے یا اگر ناک میں خُشکی وغیرہ ہے تو گائے کے گھی کے ایک یا دوقطرے ناک میں دونوں طرف ڈالیں اس سے بھی آپ کو راحت ملے گی۔

سر میں درد کی 2 بڑی وجوہات جسم میں پانی کی کمی اور خُون میں گلوکوز کا کم ہونا ہے اس لیے روزانہ زیادہ سے زیادہ پانی کا استعمال کریں اور وقت پر کھانا کھائیں اور مناسب نیند ضرور لیں۔

نمبر 2 کمر درد

رات میں کمر درد کی صُورت میں بہتر ہوگا کہ آپ پین کلر ادویات کیساتھ درد والی جگہ کی برف سے ٹکور کریں اور کسی بھی جگہ دیر تک بیٹھے اور کھڑے مت رہیں، نیم کے پتوں کو پانی میں اُبال کر اس پانی سے کپڑے کیساتھ درد والے حصے کی ٹکور کرنا بھی کمر درد میں راحت دیتا ہے۔

سفید تل 20 گرام، خُشک ادرد کا پاوڈر 3 گرام کو 40 گرام گُڑ میں مکس کر کے روزانہ 3 دن استعمال کرنا بھی کمر درد میں حیرت انگیز طور پر کمی لاتا ہے، 50 گرام پارسلے پاوڈر اور 50 گرام گُڑ بھی پیس کر مکس کر کے روزانہ صبح شام پانچ گرام کھانا کمر درد کا خاتمہ کر دیتا ہے۔

پٹھوں میں کھنچاؤ کی صُورت میں پیدا ہونے والے کمر درد کے لیے ادرک کے 2 سے 3 چھوٹے ٹکڑے کاٹ کر پانی میں قہوہ بنالیں اور اس قہوے میں تھوڑا شہد مکس کر کے استعمال کریں یہ بھی درد میں راحت کا باعث بنے گا۔

کمر درد میں کسی بھی دوا کی غیر موجودگی میں صرف ادرک کو پیس کر درد والی جگہ پر کسی پٹی کے ساتھ باندھ دیں اور روزانہ صُبح لہسن کا ایک دانہ کُچھ دن تک کھائیں اور ساتھ ہی لہسن کے تیل کی مالش بھی کمر درد سے نجات کا باعث بنتی ہے۔

نمبر 3 ٹخنوں کی درد

لہسن کی پیسٹ کو ٹخنوں میں درد کی صُورت میں ٹخنوں پر لگائیں اور تھوڑی دیر کے لیے کسی کپڑے سے باندھ دیں اس سے درد فوراً ختم ہو جاتا ہے مگر اسے زیادہ دیر تک مت باندھیں ورنہ یہ جلد کو الرجی کر سکتا ہے اسی طرح خُشک ادرک اور ہلدی کا قہوہ بنا کر سارا دن وقفے وقفے سے استعمال کریں، 20 گرام لہسن کو 20 ملی لیٹر دُودھ اور 200 ملی لیٹر پانی میں ڈالکر اتنا پکائیں کے بس دُودھ باقی بچ جائے پھر دُودھ کی پی لیں یہ نُسخہ ٹخنوں کی درد میں اکسیر کی طرح کام کرے گا۔

نمبر 4 جوڑوں کا درد

خُشک ادرک، کالی مرچ اور راک سالٹ ہم وزن پیس کر 3 گرام پاوڈر کو 3 گرام شہد میں مکس کر کے کھالیں جوڑوں کے درد میں آرام آئے گا، پارسلے اور نیم کے تیل کی مالش بھی جوڑوں کے درد میں انتہائی مُفید ثابت ہوتی ہے، باتھوا (ساگ میں ڈالنے والی سبزی) کا 15 گرام جُوس نکال کر روزانہ نہار مُنہ پینے سے بھی جوڑوں کا درد ختم ہو جاتا ہے۔

100 گرام سونف، 50 گرام ادرک کا پاوڈر،25 گرام ہلدی کو 250 گرام شُوگر میں مکس کر کے رکھ لیں اور روزانہ ایک چمچ دُودھ کے ساتھ استعمال کریں یہ نُسخہ بھی جوڑوں کے درد کے لیے انتہائی اکسیر مانا جاتا ہے، 2 جوئے لہسن کو تلوں کے تیل میں گرم کرکے درد والے حصے کی مالش کریں یا صرف لہسن کی پیسٹ کو تھوڑی دیر درد والے حصے پر لگا رہنے دیں یہ بھی جوڑوں کے درد میں آرام لائے گا۔

نمبر 5 کان درد

کان درد کی صُورت میں سرسوں کا تیل تھوڑا سا گرم کر کے چند قطرے دونوں کانوں میں ڈالیں، پیاز کا رس نیم گرم کانوں میں ڈالنے سے درد فوراً ختم ہوجاتا ہے اسی طرح ادرک کا نیم گرم جُوس بھی کان میں ڈالنے کان کے درد میں آرام آتا ہے۔

لہسن کا آدھے سے ایک دانہ تلوں کے تیل میں یا سرسوں کے تیل میں گرم کریں اور اس تیل کے 3 سے 4 قطرے دونوں کانوں میں ڈالیں اور 10 منٹ تک کان میں رہنے دیں اس سے بھی درد میں فوراً آرام آئے گا اور اگر کان میں پس پڑ گئی ہے تو کان کو گُوگل کے دھواں دیں اس سے انفیکشن میں کمی آئے گی اسی طرح تُلسی کے پتوں کو پیس کر اس کا رس نکال لیں اور اس رس کو تھوڑا گرم کرکے دونوں کانوں میں استعمال کریں۔

دانت درد کے لیے

دانت درد کی صُورت میں ہاتھ پر برف کا مساج کرنا دانت درد میں کمی کا باعث بنتا ہے اسی طرح درد والی جگہ پر لونگ رکھیں اور ہینگ کو پانی میں اُبال کر اس پانی سے کُلی کرنے سے بھی دانت درد میں راحت ملتی ہے اور اگر دانت میں کیڑا لگا ہے تو ہینگ کے پاوڈر کے کیڑے والے جگہ پر دانت میں بھر دیں اس سے کیڑا مر جائے گا اور دانت درد میں آرام آئے گا۔